اہم ترینسی پیک

شدید تحفظات پر گوادر میں باڑ لگانے کا منصوبہ روک دیا گیا

سیکرٹری دفاع نے بتایا ہے کہ تحفظات پر گوادر میں باڑ لگانے کا منصوبہ روک دیا ہے، حکومت نے کمیٹی بنائی ہے ، مفاہمت ہونے پر تیزی سے کام مکمل کرینگے ، سی پیک پارلیمانی کمیٹی نے نیو گوادر انٹرنیشنل ائرپورٹ کی سست روی سے تعمیر پر عدم اطمینان کا اظہار کیا ہے ، کمیٹی نے ائیر پورٹ کی تیزی سے تعمیر کے لیے معاملہ کو اعلیٰ سطح پر اٹھانے اور جلد ازجلد مکمل کرنے کی ہدایت کی ہے

کمیٹی کا ان کیمرہ اجلاس شیر علی ارباب کی زیر صدارت ہوا ،جس میں متعلقہ محکموں کے اعلیٰ حکام نے سی پیک کے جاری اور آئندہ کے منصوبوں پر تفصیلی بریفنگ دی ،اجلاس کو سوست بارڈر مینجمنٹ فریم ورک سے آگاہ کیا گیا

کمیٹی نے متعلقہ حکام کو سفارش کی کہ سوست بارڈر کو سارا سال کھلا رکھنے سے متعلق بارڈر مینجمنٹ فریم ورک کو ریگولیٹ کرنے کے لیے متعلقہ وزارت کے بارے میں فیصلہ کریں ، تاکہ سوست بارڈر کو سارا سال کھولنے سے متعلق عملی اقدامات کر کے تجارت اور معیشت کو درپیش مسائل کا حل نکالا جاسکے

سیکرٹری دفاع نے کمیٹی کو گوادر میں باڑ لگانے کے منصوبے پر بریفنگ دیتے ہوئے بتایا کہ اس منصوبے کا بنیادی مقصد گوادر شہر کو اسلحہ فری زون بنانا ہے تاکہ تجارت اور کاروبار کے لیے ماحول کو سازگار بنایا جائے، باڑ لگانے کا منصوبہ 4 دسمبر 2020 کو شروع ہوا لیکن بعض طبقات کی جانب سے تحفظات کے بعد اس منصوبے کو 29 دسمبر 2020 کو عارضی طور پر روک دیا گیا ہے

حکومت بلوچستان نے مقامی زعماء، منتخب نمائندگان ، سول انتظامیہ پر مشتمل کمیٹی تشکیل دی ہےتاکہ اس منصوبے کے لیے لائحہ عمل طے کیا جائے ، جونہی اس منصوبے پر مفاہمت پیدا ہوجائے گی تو تیزی سے کام مکمل کیا جائے گا، سی پیک پارلیمانی کمیٹی نے سفارش کی کہ گوادر سے تعلق رکھنے والے ارکان قومی اسمبلی اور سینٹرز کو بھی کمیٹی میں شامل کیاجائےاور مقامی لوگوں کی تشویش اور تحفظات کو دور کیا جائے تاکہ سی پیک فریم ورک کےتحت گوادر ترقی کا کام شروع ہو سکے، کمیٹی نے ایکسل لوڈ پالیسی پر عملدرآمد سے متعلق گزشتہ سفارشات کا جائزہ لیا اور پالیسی پر اس کی روح کے مطابق عملدرآمد نہ ہونے پر تحفظات کا اظہار کیا ، جس سے قومی خزانے کو اربوں روپے کا نقصان ہورہا ہے،

اوورلوڈنگ گاڑیاں سڑکوں کو ناقابل تلافی نقصان پہنچارہی ہیں ، کمیٹی نے ہدایت کی کہ وزارت مواصلات پالیسی پر عملدرآمد کو یقینی بنائے ، سی پیک کمیٹی نے راشکئی خصوصی اقتصادی زون اور علامہ اقبال انڈسٹریل سٹی فیصل آباد کے انفراسٹرکچر کی تعمیر پر اطمینان کا اظہار کیا ، کمیٹی نے ہدایت کی کہ خصوصی اقتصادی زونز میں زیادہ سے زیادہ سرمایہ کاری کو راغب کرنے کےلیے ہر ممکن اقدامات کیے جائیں ، کمیٹی نے بوستان خصوصی اقتصادی زونز پر بریفنگ کےلیے آئندہ بدھ کو خصوصی اجلاس بلایا جائے گا ۔

Tell to Others
0Shares
Tags

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker