اہم ترینبین الاقوامی پراپرٹی

پاکستان کی بڑی فتح، برٹش ورجن آئی لینڈ کورٹ نے نیویارک اور پیرس کے ہوٹلز پاکستان کو واپس کردیے

برٹش ورجن آئی لینڈ کی ہائی کورٹ نے پی آئی اے کے منجمند اثاثے بحال کردیے۔

ریکوڈک کیس میں برٹش ورجن آئی لینڈ کی ہائی کورٹ نے پاکستان کے حق میں فیصلہ سنادیا، عدالت نے پی آئی اے کے منجمد اثاثے بحال کردیے جس پر روز ویلٹ ہوٹل نیویارک اور سکرائب ہوٹل پیرس واپس پاکستان کو مل گئے۔

برٹش ورجن آئی لینڈ ہائی کورٹ نے ٹیتھان کمپنی کی جانب سے پرانے فیصلے پر عمل درآمد کی درخواست خارج کردی اور کیس میں پی آئی اے کے خلاف پہلے سے دئیے گئے تمام احکامات کو منسوخ کرتے ہوئے پی آئی اے کے اثاثے منجمد کرنے کا حکم منسوخ کردیا۔

عدالت نے ٹیتھان کاپر کمپنی کو پاکستان کے خلاف قانونی چارہ جوئی پر ہونے والے اخراجات بھی ادا کرنے کا حکم دیا تاہم ٹیتھان کمپنی فیصلے کے خلاف انٹرا کورٹ اپیل دائر کرسکے گی۔

اٹارنی جنرل خالد جاوید کا کہنا ہے کہ برٹش ورجن آئی لینڈ ہائی کورٹ کی جانب سے دیا جانے والا فیصلہ دراصل پاکستان اور پی آئی اے کے لیے بڑی فتح ہے۔ ریکوڈک کیس میں ٹیتھان کا پرکمپنی کے حق میں فیصلے کو بھی کالعدم قراردے دیا گیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ فیصلے کے بعد روزویلٹ ہوٹل، نیویارک اور سکرائب ہوٹل پیرس بھی واپس پاکستان کو مل گئے ہیں اور اب مقدمے کے اخراجات بھی ٹی سی سی کو برداشت کرنا ہوں گے۔

انہوں نے کہا کہ ٹی سی سی (ٹیتھیان کاپر کمپنی) کو فیصلے کے خلاف اپیل کی اجازت دی گئی جو کہ عام بات ہے تاہم فیصلہ پاکستان کے حق میں آیا ہے۔

Tell to Others
0Shares
Tags

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker